Thursday, April 18, 2024
ہومپاکستانسپریم کورٹ نے وکلاکو فٹبال گراونڈ فوری خالی کرنے کا حکم دے دیا

سپریم کورٹ نے وکلاکو فٹبال گراونڈ فوری خالی کرنے کا حکم دے دیا

اسلام آباد،سپریم کورٹ آف پاکستان نے اسلام آباد بارکی درخواست خارج کرتے ہوئے غیرقانونی چیمبرز فوری گرانے کا حکم دے دیاجبکہ عدالت نیوکلا کوفٹبال گراونڈ فوری خالی کرنے کا حکم بھی دیا۔تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے 3رکنی بینچ نے چیمبرزگرانے کے فیصلے کیخلاف اسلام آباد بارکی درخواست پرسماعت کی۔چیف جسٹس گلزار احمد نے اسفتسار کیا کہ کس بنیاد پر غیر قانونی چیمبرز کو برقرار رہنے دیں ؟ وکلا کا فٹبال گراونڈ پر کوئی حق دعوی نہیں، جس نے پریکٹس کرنی ہے اپنا دفتر کہیں اور بنا لے۔وکیل شعیب شاہین نے ہائیکورٹ کا فیصلہ کالعدم قراردینے کی استدعا کرتے ہوئے بتایاکہ فٹبال گراونڈ پرکئی عدالتیں بھی بنی ہوئی ہیں۔جس پر چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیئے کہ جوعدالتیں گراونڈکی زمین پربنی ہوئی ہیں وہ بھی مسمارکردیں۔چیف جسٹس گلزار احمد نے ایڈووکیٹ حامد خان نے کومخاطب کرتے ہوئے کہاکہ کسی غیرقانونی کام کوجوازکیسے فراہم کردیں؟ ،حامدخان صاحب2ماہ میں گراونڈخالی کریں؟۔ایڈووکیٹ حامد خان نے ہائیکورٹ نئی بلڈنگ میں منتقل ہونے تک کی مہلت کی استدعا کی تو چیف جسٹس نے کہاکہ اتنا لمبا وقت نہیں دے سکتے،ایف ایٹ فٹبال گراونڈ میں قائم غیرقانونی چیمبرزفوری مسمارکئے جائیں ۔سپریم کورٹ نے اسلام آباد بارکی درخواست خارج اوراسلام آباد ہائیکورٹ کا فیصلہ برقراررکھتے ہوئے غیرقانونی چیمبرز فوری گرانے کا حکم دیدیا۔