20

امریکی سفارتخانہ کی جانب سے پاکستانی خواتین کیلئے گریجویٹ سطح کے مزید 700 وظائف کا اعلان

اسلام آباد ،پاکستان میں قائم امریکی سفارتخانہ نے ہائرایجوکیشن کمیشن (ایچ اِی سی)کے اشتراک سے مزید 700پاکستانی خواتین کو گریجویٹ سطح تک حصول تعلیم کیلئے وظائف دینے کا اعلان کیا ہے ۔ دو سالہ دورانیے کے یہ وطائف، جن کا آغاز رواں سال سے ہوگا اور یہ 2023 تک جاری رہیں گے ۔امریکی ادارہ برائے بین الاقوامی ترقی اپنے میرٹ اینڈ نیڈ بیسڈ اسکالرشپ پروگرام (ایم این بی ایس پی)کے تحت ایچ ای سی کے تعاون سے تعلیمی میدان میں ذہین مگر مالی لحاظ سے پسماندہ یونیورسٹی سطح کی تعلیم کیلئے طالبعلموں کواعانت فراہم کرتا ہے۔ اس پروگرام میں ترجیحی طور پر شمالی سندھ، بلوچستان، جنوبی پنجاب، خیبر پختونخواہ اور سابقہ فاٹا کے علاقوں سمیت پاکستان کے دورافتادہ اور دیہی علاقوں کے رہائشی طالبعلم شامل ہوتے ہیں۔ یو ایس ایڈ نے 2013 سے وظائف کی تعداد میں اضافہ کرتے ہوئے صنفی مساوات اوراعلی تعلیم تک رسائی کویقینی بنانے کے لیے پچاس فیصد اسکالرشپس خواتین کیلئے مختص کردیے ہیں۔ 700اضافی اسکالرشپس فراہم کرنے کے اس اعلان سے ایم این بی ایس پی اسکالرشپس حاصل کرنے والے پاکستانی طالبعلموں کی کل تعداد چھ ہزار ہو گئی ہے۔اس موقع پریوایس ایڈ کے نائب مشن ڈائریکٹرمائیکل نہرباس نے کہا کہ مکمل مالی امداد کے حامل یہ سات سو وظائف گریجویٹ سطح کی ہونہار اور باصلاحیت خواتین کو اعلی تعلیم کا اپنا خواب پورا کرنے کیلئے بطور اعانت فراہم کیے جا رہے ہیں۔وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے سماجی تحفظ اور تخفیفِ غربت ڈاکٹر ثانیہ نشتر اورایچ ای سی کی ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈاکٹر شائستہ سہیل نے ایم این بی ایس پی میں توسیع کرنے پریوایس ایڈ کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ خواتین کے حصول تعلیم اور ملازمت میں سرمایہ کاری انھیں بااختیار بنانے اور اعلی تعلیم تک رسائی کے مواقع فراہم کرنے کے ایچ ای سی کے نصب العین سے ہم آہنگ قدم ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

رائے کا اظہار کریں