shahid khaqan abbasi 12

حکومت چیئرمین نیب کیلئے قانون بدلنا چاہتی ہے، شاہد خاقان عباسی

اسلام آباد(آئی پی ایس )پاکستان مسلم لیگ (ن )کے مرکزی سینئر رہنما وسابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ قانون کے مطابق چیئرمین نیب کی مدت ملازمت میں توسیع نہیں ہوسکتی، حکومت چیئرمین نیب کی مدت ملازمت میں توسیع کیلئے قانون تبدیل کرنے کی کوشش کر رہی ہے۔اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ کہ موجودہ قانون کے مطابق چیئرمین نیب کی مدت ملازمت میں توسیع نہیں ہوسکتی اور چیئرمین نیب کو مشاورت سے تعینات کیا جاتا ہے۔شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ کیاحکومت میں ہمت ہے قانون کی نفی کرکے چیئرمین نیب کوتوسیع دے۔ حکومتی وزرا کہتے ہیں نیب ہم چلاتے ہیں۔انہوں نے کہا ایل این جی کی مد میں ایک سال میں 2 ارب ڈالر کا نقصان ہو رہا ہے۔ کیا ان معاملات کی تحقیقات کیلئے چیئر مین نیب کو مزید وقت چاہیئں۔ کیا چیئرمین نیب کوتحقیقات کیلئے مزید 4 سال چاہئیں؟شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ بدقسمتی سے سیاست میں نامناسب رو ش اختیار کی جارہی ہے۔ جس پر الزام لگانا ہے مقدمہ درج کرائیں، کسی کی زندگی سے نہ کھیلیں۔ن لیگی رہنما نے کہا کہ چیئرمین نیب کی مدت میں10 دن رہتے ہیں لیکن حکومت نے تاحال مشاورت بھی شروع نہیں کی۔ حکومت کی بد نیتی اس سے صاف ظاہر ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

رائے کا اظہار کریں