sco 19

ایس سی او نے ہزاروں سال قدیم یونیورسٹی کے احاطے میں اپنا ٹاور نصب کرنے کی خبروں کو مسترد کردیا

گلگت ،ایس سی او نے داریل کے عوام کے مطالبے پر پھوگھچ(داریل)میں کرایہ پر زمین حاصل کر کے ٹاور انسٹال کرنے کے لئے کام شروع کیا تھا لیکن دوران کھدائی اس جگہ سے آثار قدیمہ سے متعلق کچھ چیزیں برآمد ہوئیں تو ایس سی او کے ذمہ داران نے اس جگہ پر فورا کام روک کر اس سلسلے میں مقامی انتظامیہ کو فوری طور پر آگاہ کیا تاکہ اس جگہ پر موجود آثارقدیمہ کو کسی طرح نقصان نہ پہنچے۔اور اس جگہ پر کام بند کر کے ٹاور انسٹال کرنے کے لیے کسی اور جگہ کا انتخاب کیا ہے۔یہ بات ادارے کی جانب سے ایک وضاحتی بیان میں کہی گئی ہے جو کی سوشل میڈیا پر شائع ایک خبر سے مطلق تھی جس میں کہا گیا تھا کہ ایس سی اونے پھوگھچ (داریل)میں ہزاروں سال قدیم یونیورسٹی آثار کے احاطے میں اپنا ٹاور نصب کرنے کے لئے کام شروع کیا جس سے آثار قدیمہ کو نقصان پہنچنے کا اندیشہ ہے۔ادارہ اس بات کی سختی سے تردید کرتا ہے اور اس خبر کو جھوٹ اور بد نیتی اور ادارے کو بد نام کرنے کی ناکام کوشش قرار دیتا ہے۔کیوں کہ ایس سی اوایک حکومتی ادارہ ہے اور ادارے کو اپنی پیشہ وارانہ ذمہ داریوں سے بخوبی آگاہ ہے اور داریل سمیت کسی بھی علاقے میں اپنے کام کے دوران اس بات کو ہر لحاظ سے یقینی بنایا جاتا ہے کہ متعلقہ زمین متنازعہ نہ ہو یا کسی طرح نقصان کا اندیشہ نہ ہو۔لہذا کسی بھی شخص بشمول میڈیا نمائندوں کو کوئی بھی خبر لگانے سے پہلے متعلقہ ادارے سے اس حوالے سے معلومات حاصل کر لینی چاہیے۔بجائے اس کے کہ وہ کسی بھی پلیٹ فارم پر جا کر بغیر تحقیق کے کسی بھی ادارے کے خلاف یکطرفہ خبر لگا دیں۔اس سے نہ صرف ادارے کے ساتھ کو نقصان پہنچ سکتا ہے بلکہ متعلقہ میڈیا کے معیار پر بھی حرف آ سکتا ہے۔لہذا عوام کو حقائق کے منافی اور ادارے کو بد نام کرنے والے کسی بھی بیان پر بالکل توجہ نہ دیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

رائے کا اظہار کریں