National Security Committee 15

قومی سلامتی کمیٹی کااجلاس ، ملکی اور افغانستان کی صورتحال پر تبادلہ خیال

اسلام آباد،وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کا اہم اجلاس ہوا۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس وزیر اعظم ہاوس میں ہوا، جس میں آرمی چیف،پاک بحریہ ،پاک فضائیہ کے سربراہان اور ڈی جی آئی ایس آئی بھی شریک ہوئے۔اجلاس میں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، وزیر داخلہ شیخ رشید، وزیر دفاع پرویزخٹک، وزیر خزانہ شوکت ترین، وزیر اطلاعات فواد چوہدری اور قومی سلامتی کے مشیر ڈاکٹر معید یوسف بھی موجود تھے۔وزیراعظم کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس میں ملک کی داخلی سکیورٹی، بارڈر منیجمنٹ اور افغانستان کی تازہ ترین صورتحال پر تفصیلی غور کیا گیا۔قومی سلامتی کمیٹی کو لائن آف کنٹرول سمیت بارڈر مینجمنٹ پر بھی بریفنگ دی گئی جبکہ ملک کو درپیش اندرونی و بیرونی خطرات سے نمٹنے کے لیے حکمت عملی پر مشاورت کی گئی۔اجلاس میں افغانستان سے متعلق عالمی برادری کے نقطہ نظر اور پاکستان کی کوششوں پر بھی تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ پاکستان کی سیاسی اور عسکری قیادت نے اس عزم کا اظہار کیا کہ قوم کی حمایت سے ملک کو درپیش تمام چیلنجز کا کامیابی کیساتھ مقابلہ کیا جائے گاشیخ رشید احمد نے قومی سلامتی کمیٹی اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کہا کہ اجلاس میں ملکی صورتحال اور افغانستان کی صورتحال پر بات چیت کی گئی ہے،بارڈرز کے حوالے سے بھی بات چیت ہوئی ہے،تمام ملکی حالات پر تفصیلی بات چیت ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ افغانستان پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

رائے کا اظہار کریں