court 9

احتساب عدالت نے برطانیہ میں 6کروڑ پاونڈ فراڈ سے متعلق کیس کا فیصلہ سنادیا

اسلام آباد(آئی پی ایس)اسلام آباد کی احتساب عدالت نے برطانیہ میں 6 کروڑ پاونڈ مارٹگیج فراڈ کے بعد فرار ہوکر پاکستان آنے والے ملزمان کی پراپرٹیز سے پابندی ہٹانے کی درخواست مسترد کردی ،نیب نے پہلے ہی نثار افضل اور صغیر افضل کے تمام اہلخانہ اور رشتہ داروں کے اثاثے منجمد کردیے ،احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے ملزم نثار افضل کی درخواست خارج کردی ،نیب پراسیکیوٹر نے عدالت کو بتایا کہ نثار افضل کو نیب طلبی کا نیا نوٹس جاری ہوچکا، مبینہ جرم بھی درج ہے،نیب نے پہلے ہی نثار افضل اور صغیر افضل کے تمام اہلخانہ اور رشتہ داروں کے اثاثے منجمد کردیے ،ملزم نثار افضل اربوں روپے کے اثاثے بنانے کا کوئی ثبوت فراہم نہ کرسکا، نیب پراسیکیوٹر سہیل عارف نے احتساب عدالت سے استدعا کی کی ملزم کی درخواست خارج کرنے کی استدعا منظور کی جائے ، عدالت نے نیب کی استدعا منظور کرتے ہوئے ملزمان کی پراپرٹیز سے پابندی ہٹانے کی درخواست مسترد کردی، عدالت نے قرار دیا کہ نیب آرڈیننس کی شق 23 کے تحت پراپرٹیز پر پابندی برقرار رہے گی۔


اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

رائے کا اظہار کریں